گورنر کا خطاب کسانوں۔ نوجوانوں کےلئے گمراہ کن:اکھلیش

کسان کی فصل کم داموں پر فروخت ہورہی ہے۔ ایم ایس پی کی لازمیت پر ایک بھی لفظ نہیں ہے۔

گورنر کا خطاب کسانوں۔ نوجوانوں کےلئے گمراہ کن:اکھلیش

لکھنو¿،24مئی(پی اےن اےن)سماج وادی پارٹی کے صدر و اترپردیش اسمبلی میں اپوزیشن لیڈر اکھلیش یادو نے کہا ہے کہ اسمبلی میں گورنر کے خطاب میں کسانوں ، نوجوانوں کو گمراہ کیا گیا ہے۔یادو نے کہا کہ گورنر آنندی بین پٹیل کے خطاب میں کچھ بھی نیا نہیں ہے اور نہ ہی اس میں ریاست کی ترقی کی کوئی منظم تصویر ہی دکھائی دیتی ہے۔ حکومت کچھ بھی کہے لیکن عوام پر حقیقت آشکارا ہے۔بی جے پی حکومت نے گزشتہ پانچ سال نام اور پتھر بدلنے میں گزار دئیے جبکہ آج بھی وہ مفاد عامہ کی ٹھوس منصوبوں کی پیشکش سے محروم ہیں۔انہوں نے دعویٰ کیا کہ ناموں کے معمولی حذف و اضافہ کے ساتھ ریاستی حکومت نے جو منصوبے پیش کئے ہیں وہ تقریبا وہی ہیں جن کا آغاز سماج وادی حکومت میں پہلے ہی ہوچکا تھا۔میڈیکل اور تعلیم کے شعبے میں کچھ نیا کرنے کے بجائے سماج وادی حکومت کے کاموں کو ہی شمار کرادیا گیا ہے۔ ایک بھی یونٹ بجلی پیدا نہ کرنے والی بی جے پی حکومت میں لوگ بجلی کٹوتی کی وجہ سے تاریکی اور شدید گرمی میں جینے کومجبور ہیں۔انہوں نے کہا کہ گورنر کے خطاب میں کسانوں، نوجوانوں کو گمراہ ہی کیا گیا ہے۔ کسان کی فصل کم داموں پر فروخت ہورہی ہے۔ ایم ایس پی کی لازمیت پر ایک بھی لفظ نہیں ہے۔ کسان کی آمدنی دوگنی کرنے کا وعدہ کھوکھلا ہی دکھ رہا ہے۔ گنا کسانوں کی ادائیگی کی بڑی رقم ہنوز باقی ہے۔ گیہوں خرید کا ہدف پورا نہیں ہوا ہے۔نوجوانوں کے روزگار کے لئے کوئی خاکہ نہیں ہے۔سابق وزیر اعلیٰ نے کہا کہ وزیر اعلی اور بی جے پی حکومت کے ذریعہ ریاست میں جرائم میں گراوٹ کے جو دعوے کئے جارہے ہیں ان کی پول راشٹریہ کرائم ریکارڈ بیورو کے اعداد سے کھل گئی ہے۔یومیہ پولیس حراست میں لوگوں کی موت ہورہی ہے۔ بی جے پی حکومت اور انتظامیہ صرف اپنے مفاد کے لئے ہی معصوموں کو ہراساں کررہے ہیں۔ انہیں عوام کی سیکورٹی سے کوئی واسطہ نہیں ہے۔ایس پی صدر نے کہا کہ حقیقت تو یہ ہے کہ بی جےپی حکومت کے منصوبوں میں بھی آر ایس ایس کے ایجنڈے کی جھلک دکھائی دیتی ہے۔ ایک خاص سماج کے تئیں نظراندازی کا جذبہ اس میں ظاہر ہے۔ غریب، کسان، نوجوان، ٹیچر اور کاروباری سماج کو سہولیت تو ملی نہیں ان کی تکالیف میں مزید اضافہ کردیا گیا ہے۔گورنر نے بی جے پی حکومت کے کھوکھلے وعدوں کی کتاب کوہی پڑھ کر اپنی ذمہ داری پوری کردی ہے۔